وزیراعظم کی زیر صدارت ترقیاتی منصوبوں سے متعلق اجلاس کی اندرونی کہانی ، سندھ حکومت مطمئن کرنے میں ناکام ہوگئی،عمران خان نے لاجواب کردیا

  اتوار‬‮ 16 ستمبر‬‮ 2018  |  21:00

کراچی (این این آئی) وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ترقیاتی منصوبوں سے متعلق اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی۔ سندھ حکومت وزیراعظم عمران خان کو مطمئن کرنے میں ناکام ہوگئی۔ تفصیلات کے مطابق اتوار کو اسٹیٹ گیسٹ ہاؤس میں وزیراعظم عمران خان کو ترقیاتی منصوبوں سے متعلق بریفنگ دی گئی۔سندھ حکومت وزیراعظم عمران خان کو مطمئن کرنے میں ناکام ہوگئی کیونکہ سندھ حکومت ترقیاتی منصوبوں پر مطلوبہ تنائج حاصل نہ کرسکی۔ وزیراعظم عمران خان نے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کو ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ مراد علی شاہ صاحب آپ منصوبوں کے لیے وزیرخزانہ کے ساتھ بیٹھیں۔

صدر مملکت، گورنر سندھ اور وزیرخزانہ آپ کی بھرپور مدد کریں گے۔وزیراعظم کو وفاقی منصوبوں کے فور اور ایس تھری پر ایم ڈی واٹر بورڈ نے بریفنگ دی۔ ایم ڈی واٹر بورڈ صرف وفاق سے پیسے نہ ملنے کا رونا روتے رہے۔ وزیراعظم نے ایم ڈی واٹر بورڈ سے سوال کیا کہ کام کی پیشرفت بتائیں پیسے کا رونا چھوڑیں۔ لگتا ہے صرف کاغذوں میں پیشرفت ہوئی ہے ۔ وزیراعظم نے کمشنر کراچی صالح فاروقی سے سوال کیا کہ گرین لائن بس کا کیا ہوا۔ صالح فاروقی نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ کام مکمل ہوگیا ہے۔ ہم نے پیسے بچالیے ہیں۔ وزیراعظم نے سوال کیا کہ آپ کمشنربھی ہیں اور گرین بس کے سربراہ بھی۔ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ترقیاتی منصوبوں سے متعلق اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی۔ سندھ حکومت وزیراعظم عمران خان کو مطمئن کرنے میں ناکام ہوگئی۔ تفصیلات کے مطابق اتوار کو اسٹیٹ گیسٹ ہاؤس میں وزیراعظم عمران خان کو ترقیاتی منصوبوں سے متعلق بریفنگ دی گئی۔ سندھ حکومت وزیراعظم عمران خان کو مطمئن کرنے میں ناکام ہوگئی کیونکہ سندھ حکومت ترقیاتی منصوبوں پر مطلوبہ تنائج حاصل نہ کرسکی۔

موضوعات: