قصور کی ننھی زینب اور دیگر بچیوںکے سیریل کلر عمران کا طاہر القادری سے کیا تعلق ہے؟تہلکہ خیز انکشافات سامنے آگئے

  جمعہ‬‮ 26 جنوری‬‮ 2018  |  17:13

اسلام آباد (مانیٹرنگ  ڈیسک)قصور کی ننھی زینب اور دیگر بچیوں کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کرنے والے سیریل کلر عمران طاہر القادری کی تحریک منہاج القرآن کا کارکن نکلا، نعت خوانی کے علاوہ مذہبی مجالس میں نقابت کے فرائض بھی سر انجام دیتا تھا، پاکستان کے موقر قومی اخبار روزنامہ امت کی رپورٹ میں تہلکہ خیز انکشاف۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان کے موقر قومی اخبارروزنامہ امت کی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ قصور کی ننھی زینب اور دیگر بچیوں کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کرنے والا سیریل کلر عمران طاہر القادری کی


تحریک منہاج القرآن کا کارکن ہے،رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ قاتل عمران نعت خوانی کے علاوہ مذہبی مجالس میں نقابت کے فرائض بھی سر انجام دیتا تھا جبکہ اس کی نشاندہی پر ایک نعت خواں قاری سہیل قادری کو بھی پولیس نے حراست میں لیا تھا، بتایا جاتا ہے کہ قاری سہیل قادری عمران کا استاد تھا ۔ عمران نے اپنا ویزیٹنگ کارڈ بھی چھپوا رکھا تھا۔ا خبارکی رپورٹ کے مطابق عمران تحریک منہاج القرآن کا کارکن تھا اور ان کے دھرنوں میں بھی شریک ہوتا تھا، لیکن یہ کنفرم نہیں ہوسکا کہ وہ تحریک منہاج القران کا عہدیدار ہے یا نہیں۔ اخبار کے مطابق اہم بات یہ ہے کہ تحریک منہاج القرآن کے سربراہ طاہرالقادری زینب کی نماز جنازہ پڑھانے کیلئے تو فوراً قصور پہنچ گئے، لیکن اس کے بعد انہوں نے ادھر کا رخ نہیں کیا، نہ ہی ملزم عمران کی گرفتار پر ان کی طرف سے کوئی ردعمل سامنے آیا، جو حیران کن بات ہے۔ اس سے شبہ ہوتا ہے کہ ملزم عمران کے ڈانڈے کہیں نہ کہیں تحریک منہاج القرآن سے ملتے ہیں۔واضح رہے کہ سیریل کلر عمران طاہر القادری کے زینب کے نماز جنازہ کیلئے قصور پہنچنے پر نماز جنازہ میں بھی شریک ہوا تھا اور سوشل میڈیا پر اس کی نماز جنازہ میں طاہر القادری کے بالکل عقب میں موجودگی کی تصاویر اور ویڈیوز بھی سامنے آچکی ہیں۔

موضوعات:

loading...