سابقہ خاصہ دار اور لیویز اہلکاروں کی سروس معاملات میں خلل ڈالنے کا انکشاف،فورسز میں بے چینی

  جمعہ‬‮ 30 اکتوبر‬‮ 2020  |  22:47

بنوں (آن لائن) ہوم ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے سابقہ خاصہ دار اور لیویز اہلکاروں کی سروس معاملات میں خلل ڈالنے کا انکشاف, ضم اضلاع کی فورس میں یہ بے چینی پیدا ہونے لگی ہے کہ کیا وہی سابقہ دور تو دہرایا نہیں جا رہا، فاٹا انضمام کے بعدفاٹا سیکرٹریٹ کو بھی ختم کر دیا گیا, جس کے بعد سابقہ فاٹا کی سرکاری نوکریوں کی تمام تر معاملات ہوم ڈیپارٹمنٹ کے حوالے کئے گئے خیبر پختونخوا پولیس میں انضمام کے وقت قبائلی فورس نے احتجاجی تحریک شروع کی اور انہوں نے 22 نقاط پر مشتمل مطالبات پیش کئے ساتھ میں یہ


میں یہ بھی مطالبہ کر رہے تھے کہ ان کی نوکریوں کی معاملات میں بیوروکریسی خلل ڈال رہی ہے پولیس میں انضمام کے بعد اب ایک بار پھر ان اہلکاروں نے یہ ظاہر کیا ہے کہ کیا دوبارہ ہمیں اس دور میں نہیں گھسیٹا تو نہیں جا رہا جس سے ہم بامشکل نکل آ چکے ہیں, کیونکہ اہلکار سے صوبیدار میجر تک کہ قبائلی فورس کی فائلوں میں رکاوٹیں کھڑی کی گئیں ہیں ذرائع نے بتایا کہ ہوم ڈیپارٹمنٹ میں انتظامی امور چلانے کیلئے تین آفسران کا تبادلہ کیا گیا ہے جس کے پاس قبائلی فورس کی نوکریوں کے معاملات اور فائل پڑے ہیں لیکن وہ حل کرنے کے بجائے اس میں مشکلات پیدا کر رہے ہیں جس طرح پہلے دور میں انتظامیہ ہمارے ساتھ کر رہی تھی وہی دہرایا جا رہا ہے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

ترکی کا ابن بطوطہ

آپ اگر حضرت ابو ایوب انصاریؓ کے مزار سے اتاترک برج کی طرف آئیں تو آپ کو پُل سے پہلے بائیں جانب ایک چھوٹی سی قدیم مسجد دکھائی دے گی‘ یہ مسجد چلبی کہلاتی ہے اور اس مناسبت سے اس پورے علاقے کا نام چلبی ہے‘ چلبی کون تھا؟ یہ تاریخ کا انتہائی دل چسپ کردار تھا‘ پورا ....مزید پڑھئے‎

آپ اگر حضرت ابو ایوب انصاریؓ کے مزار سے اتاترک برج کی طرف آئیں تو آپ کو پُل سے پہلے بائیں جانب ایک چھوٹی سی قدیم مسجد دکھائی دے گی‘ یہ مسجد چلبی کہلاتی ہے اور اس مناسبت سے اس پورے علاقے کا نام چلبی ہے‘ چلبی کون تھا؟ یہ تاریخ کا انتہائی دل چسپ کردار تھا‘ پورا ....مزید پڑھئے‎