لودھراں ضمنی الیکشن،ن لیگ کاتحریک انصاف کوبڑاجھٹکا،اہم رہنماءکابڑااعلان

  بدھ‬‮ 9 دسمبر‬‮ 2015  |  18:11

لاہور( نیوزڈیسک)پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی راہنما و ممبر قومی اسمبلی حمزہ شہباز نے کہا ہے کہ عوام نے حالیہ بلدیاتی الیکشن میں ترقی و خوشحالی کے حق میں فیصلہ دے کر ثابت کر دیا ہے کہ ان کا دھرنوں اور احتجاج کی سیاست سے کوئی تعلق نہیں ،126 دنوں تک قوم کا وقت ضائع کرنے والوں کے پاس اب بھی موقع ہے کہ اپنی غلطیوں کی اصلاح کرتے ہوئے مثبت ایجنڈے کا ساتھ دیں ،23 دسمبر کو لودھراں میں این اے 154- کے الیکشن کا نتیجہ بھی دیگر ضمنی نتائج سے مختلف نہیں ہو گا اور جیت انشا


ءاللہ وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کے اس ویژن کی ہو گی جس کا مقصد پاکستان کو صحیح معنوں میں ترقی یافتہ اقوام کی صف میں شامل کرنا ہے ۔ حمزہ شہباز نے لودھراں میں تحریک انصاف کے مختلف رہنما¶ں کی پاکستان مسلم لیگ (ن) میں شمولیت کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان 20 کروڑ غیور پاکستانیوں کا ایٹمی طاقت کا حامل ملک ہے ۔البتہ ہم بھارت سے برابری کی سطح پر مذاکرات کے خواہاں ہیں ۔ انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ قوم عمران خان سے سوال کرتی ہے کہ وہ ایسے شخص کے جہاز میں کیوں سفر کرتے ہیں جس نے مشرف دور میں کروڑوں روپے کا بینکوں سے قرضہ معاف کرایا ۔نئے پاکستان بنانے کا دعویٰ کرنے والوں کا علیم خان اور جہانگیر ترین جیسے لوگوں کو ضمنی الیکشن میں نامزد کرنا عام آدمی کی سمجھ سے بالا تر ہے۔حمزہ شہباز نے لودھراں کے ضمنی انتخاب کے حوالے سے مصروف دن گزارا اور پارٹی کے ضلعی صدر امین طاہر غوری ، سلمان منگلا کی رہائش گاہوں پر معززین علاقہ اور تاجروں ،صنعتکاروں ،کسانوں کے وفود سے ملاقاتیں کیں ۔جنہوں نے 23 دسمبر کے ضمنی الیکشن میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی انتخابی مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینے کا اعلان کیا۔ مرکزی جمعیت اہلحدیث کے جنرل سیکرٹری و ممبر قومی اسمبلی حافظ عبدالکریم نے بھی حمزہ شہباز سے لودھراں میں ملاقات کے دوران این اے 154 کے ضمنی الیکشن میں بھر پور حمایت کا اعلان کیا ۔سینیٹر سعود مجید ،ایم این اے عبدالرحمن کانجو ،این اے 154 سے پارٹی امیدوار محمد صدیق خان بلوچ ، پی پی 210 سے سابق امیدوار رانا محمد اسلم اور پارٹی رہنما¶ں کی بڑی تعداد بھی اس موقع پر موجود تھی جبکہ پارٹی کارکن زبردست نعرے بازی کرتے رہے اور انتہائی جوش و خروش کا مظاہرہ کیا ۔