مسلم لیگ ن کی سابق صدر اور سینئر پارلیمنٹیرین انتقال کرگئیں

3  دسمبر‬‮  2022

راولپنڈی(این این آئی)پاکستان مسلم لیگ (ن)شعبہ خواتین کی سابق صدر، سینئر پارلیمنٹرین ،رکن قومی اسمبلی طاہرہ اورنگزیب کی بڑی بہن اور وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب کی خالہ بیگم نجمہ حمید صاحبہ انتقال کر گئیں ۔ ان کی نماز جنازہ کل اتوار مورخہ4 دسمبر کو بعدنماز ظہر

راولپنڈی میں ان کی رہائش 877، ایف بلاک سیٹلائٹ ٹائون میں ادا کی جائیگی۔ بیگم نجمہ حمید صاحبہ ایصال ثواب کے لئے رسم قل اور اجتماعی دعاء پیر مورخہ 5دسمبر2022 کو ظہر کی نماز کے بعد صدیق شادی ہال سیٹلائٹ ٹائون راولپنڈی میں ہوگی۔ بیگم نجمہ حمید ایک سیاسی عہداور مسلم لیگ کی شناخت تھیں، انہیں پیدائشی مسلم لیگی کا لقب دیاجاتا تھا،قیام پاکستان اور اس کے بعد وہ تمام عمر مسلم لیگ سے ہی وابستہ رہیں ۔ پاکستان مسلم لیگ (ھ)کے قائد محمد نوازشریف اور بیگم کلثوم نواز کیساتھ ان کی خصوصی قربت رہی۔ محمد نوازشریف کے سیاسی سفر کے اول دن سے وہ ان کیساتھ رہیں ۔ واضح اصولی ونظریاتی وابستگی اور سوچ کے ساتھ تمام عمر انہوں نے ایک لیگی کے طور پر جمہوری وسیاسی جدوجہد کی۔ محمد نوازشریف کی گرفتاری اور پرویز مشرف کے دور میں بیگم کلثوم کی سیاسی جدوجہد میں وہ ان کی دست راست اور نمایاں رہنمائوں میں سرفہرست تھیں۔ راولپنڈی میں بیگم نجمہ حمید کا گھر مسلم لیگ کا سیاسی قلعہ بنا رہا اور بیگم کلثوم ان کی رہائشگاہ پر نظر بند رہیں۔ بیگم نجمہ حمید دو بار سینیٹ کی رکن رہیں۔ پارٹی کے شعبہ خواتین کی طویل ترین عرصہ تک صدر رہنے کا بھی اعزاز انہیں حاصل رہا ۔ 2011میں ان کے مستعفی ہونے کے بعدسے یہ عہدہ خالی رہااور پارٹی نے کسی اور کو صدر شعبہ خواتین مقرر نہیں کیا۔

موضوعات:



کالم



فواد چودھری کا قصور


فواد چودھری ہماری سیاست کے ایک طلسماتی کردار…

ہم بھی کیا لوگ ہیں؟

حافظ صاحب میرے بزرگ دوست ہیں‘ میں انہیں 1995ء سے…

مرحوم نذیر ناجی(آخری حصہ)

ہمارے سیاست دان کا سب سے بڑا المیہ ہے یہ اہلیت…

مرحوم نذیر ناجی

نذیر ناجی صاحب کے ساتھ میرا چار ملاقاتوں اور…

گوہر اعجاز اور محسن نقوی

میں یہاں گوہر اعجاز اور محسن نقوی کی کیس سٹڈیز…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے (آخری حصہ)

میاں نواز شریف کانگریس کی مثال لیں‘ یہ دنیا کی…

نواز شریف کے لیے اب کیا آپشن ہے

بودھ مت کے قدیم لٹریچر کے مطابق مہاتما بودھ نے…

جنرل باجوہ سے مولانا کی ملاقاتیں

میری پچھلے سال جنرل قمر جاوید باجوہ سے متعدد…

گنڈا پور جیسی توپ

ہم تھوڑی دیر کے لیے جنوری 2022ء میں واپس چلے جاتے…

اب ہار مان لیں

خواجہ سعد رفیق دو نسلوں سے سیاست دان ہیں‘ ان…

خودکش حملہ آور

وہ شہری یونیورسٹی تھی اور ایم اے ماس کمیونی کیشن…