صبح 4بجے خانیوال کی معروف شاہراہ پر کم سن بچے کو ایک شخص نے اپنی گاڑی میں لفٹ دی ، دکھ بھری داستان سن کر اس نیک بندے نے اس محنت کش بچے کی کتنی بڑی مدد کی؟ویڈیو سوشل میڈیا پر تیزی سے وائرل

  جمعرات‬‮ 25 اپریل‬‮ 2019  |  12:43

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)صوبہ پنجاب کے شہر خانیوال کی ایک شاہراہ پر رات گئے ایک شخص نے رکشے کے انتظار میں کھڑے کم سن بچے کو لفٹ دیکر انسان دوستی کی عمدہ مثال قائم کردی ۔ تفصیلات کے مطابق ایک شہری جو رات گئےاپنی گاڑی میں سڑک سے گزر رہا تھا کہ اسے سڑک کنارے ایک بچہ ہاتھ میں کتابیں تھامے کھڑا نظر آیا۔ شہری نے گاڑی روک کر جب اس بچے سے استفسار کیا کہ یہاں اتنی رات کو کیوں کھڑے ہو؟ تو کم سن بچے نے جواب دیا کہ میں یہاں گھر جانے کے لیے رکشے کے انتظار میں


کھڑا ہوں لیکن کوئی رکشہ مل نہیں رہا۔جس پر اس شہری نے اس بچے کو اپنے ساتھ گاڑی میں بٹھایا اور باحفاظت گھر پہنچانے کا وعدہ کیا۔ دوران سفر شہری نے بچے کی ویڈیو بھی ریکارڈ کی جس میں بچے نے بتایا کہ اس کے والد کا انتقال ہوچکا ہے، وہ گھر چلانے کے لیے کتابیں بیچتا ہے، ایک کتاب 100 روپے کی بکتی ہے جس میں اسے 40 روپے منافع ہوتا ہے۔اس کا چھوٹا بھائی بھی مجبوری میں کام کرتا ہےاور قلفی بیچتا ہے۔ بچے نے بتایا کہ اسے انڈے اور بریڈ گھر لے کر جانا ہے۔ لفٹ دینے والے نیک صفت شہری نے نہ صرف بچے کو راستے سے ناشتے کا سامان دلوایا بلکہ اس سے اس کی تمام کتابیں بھی خرید لیں۔ سوشل میڈیا صارفین نے اس شہری کی انسان دوستی کو خوب سراہا۔

موضوعات:

loading...