تاریخ میں پہلی بار خام تیل کی قیمت منفی زون میں چلی گئی، عالمی مارکیٹ میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مزید کمی لیکن پاکستان میں اضافہ

  پیر‬‮ 29 جون‬‮ 2020  |  20:39

سنگا پور (مانیٹرنگ ڈیسک) عالمی مارکیٹ میں خام تیل کے نرخ مزید نیچے آ گئے جس کی بڑی وجہ امریکہ میں تیل کا ذخیرہ گنجائش کے مطابق مکمل ہونا ہے۔سنگا پور مرکنٹائل ایکس چینج کے دوسرے سیشن کے دوران نیویارک مین کنٹریکٹ کے تحت برنٹ کروڈ کی جولائی کے لیے سپلائی کے سودے 83 سینٹ (2فیصد)کمی کے ساتھ 40.19 ڈالر فی بیرل اور امریکی کروڈ ڈبلیو ٹی آئی کیسپلائی 80 سینٹ (2.1 فیصد)کمی کے ساتھ 37.69 ڈالر فی بیرل طے پائے۔ دوسری جانب ایک موقر قومی اخبار میں رپورٹ جاری ہوئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ امریکی منڈی


میں تیل مفت اور ایک بیرل لینے پر 37 ڈالر بھی ملیں گے، رپورٹ کے مطابق تاریخ میں پہلی بار خام تیل کی قیمت منفی زون میں چلی گئی، پیداوار بڑھنے اور دنیا بھر میں لاک ڈاؤن کے باعث کھپت نہ ہونے سے ذخیرہ کرنے کی جگہ ختم ہو گئی ہے، نئی امریکی کمپنیاں بند ہونے کے قریب ہیں، مارکیٹ 5 ڈالر فی بیرل پر کھلی، چند گھنٹوں میں کریش کر گئی، کمپنیوں نے اعلان کیا ہے کہ وہ ایک بیرل کے بدلے خریدار کو 37 ڈالر بھی دیں گی۔ واضح رہے کہ عالمی منڈی میں تیل کی قیمتوں میں کمی کے باوجود پاکستان میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا گیا ہے۔ عالمی مارکیٹ میں خام تیل کے نرخ مزید نیچے آ گئے جس کی بڑی وجہ امریکہ میں تیل کا ذخیرہ گنجائش کے مطابق مکمل ہونا ہے۔سنگا پور مرکنٹائل ایکس چینج کے دوسرے سیشن کے دوران نیویارک مین کنٹریکٹ کے تحت برنٹ کروڈ کی جولائی کے لیے سپلائی کے سودے 83 سینٹ (2فیصد)کمی کے ساتھ 40.19 ڈالر فی بیرل اور امریکی کروڈ ڈبلیو ٹی آئی کی سپلائی 80 سینٹ (2.1 فیصد)کمی کے ساتھ 37.69 ڈالر فی بیرل طے پائے۔ دوسری جانب ایک موقر قومی اخبار میں رپورٹ جاری ہوئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ امریکی منڈی میں تیل مفت اور ایک بیرل لینے پر 37 ڈالر بھی ملیں گے


موضوعات: