ہفتہ‬‮ ، 22 جون‬‮ 2024 

یہ سال جاتے جاتے بہت کچھ لے جائے گا ، جہانگیر ترین کس کی طرف سے کھیلیں گے ؟فائنل رائونڈ کی تیاری دونوں سائیڈز ہو چکی ، تہلکہ خیز انکشافات ‎

datetime 10  ‬‮نومبر‬‮  2020

یہ سال جاتے جاتے بہت کچھ لے جائے گا ، جہانگیر ترین کس کی طرف سے کھیلیں گے ؟فائنل رائونڈ کی تیاری دونوں سائیڈز ہو چکی ، تہلکہ خیز انکشافات ‎

جاوید چودھری اپنے آج کے کالم میں لکھتے ہیں کہ ۔۔۔طارق بشیر چیمہ نے اٹھتے اٹھتے کہا ’’چوہدری شجاعت حسین واپس آ گئے ہیں‘ آپ ان کا پتا کر لیں‘‘ وزیراعظم عمران خان نے حیرت سے پوچھا ’’وہ کہاں گئے تھے‘‘ یہ جواب حیران کن تھا‘ کیوں؟ کیوں کہ چوہدری شجاعت شدید علیل تھے اور… Continue 23reading یہ سال جاتے جاتے بہت کچھ لے جائے گا ، جہانگیر ترین کس کی طرف سے کھیلیں گے ؟فائنل رائونڈ کی تیاری دونوں سائیڈز ہو چکی ، تہلکہ خیز انکشافات ‎

یہ مدینہ کی ریاست ہے لیکن اس میں حضرت عمرفاروق ؓ نہیں ہیں‎

datetime 15  ستمبر‬‮  2020

یہ مدینہ کی ریاست ہے لیکن اس میں حضرت عمرفاروق ؓ نہیں ہیں‎

خاتون کا تعلق فرانس سے تھا‘ فرانس میں تعلیم حاصل کی‘ فرانس ہی میں جوان ہوئی اور فرانس ہی میں شادی ہوئی‘ خاوند گوجرانوالہ کا رہائشی تھا لیکن پیرس میں رہتا تھا‘ خاتون کا میکہ لاہور میں تھا‘ میکے اور سسرال کے تعلقات ٹھیک نہیں تھے‘ خاوند خاتون کومیکے جانے سے روکتا رہتا تھا‘ گھر… Continue 23reading یہ مدینہ کی ریاست ہے لیکن اس میں حضرت عمرفاروق ؓ نہیں ہیں‎

عثمان بزدار کے ایک افسر پوری پنجاب بیوروکریسی میں’” ٹیکا‘ “کہلاتے ہیں‎ یہ روز شام سات بجے سے رات گیارہ بجے تک وزیراعلیٰ کے ساتھ ہوتے ہیں‎،قوم کو ٹیکا کیسے لگاتے ہیں ؟ جاوید چودھری کے حیران کن انکشافات ‎‎

datetime 16  اگست‬‮  2020

عثمان بزدار کے ایک افسر پوری پنجاب بیوروکریسی میں’” ٹیکا‘ “کہلاتے ہیں‎ یہ روز شام سات بجے سے رات گیارہ بجے تک وزیراعلیٰ کے ساتھ ہوتے ہیں‎،قوم کو ٹیکا کیسے لگاتے ہیں ؟ جاوید چودھری کے حیران کن انکشافات ‎‎

سید تسنیم عباس نقوی منڈی بہائوالدین سے تعلق رکھتے ہیں‘ یہ عرف عام میں بوگے شاہ کہلاتے ہیں‘ بوگے شاہ نے 25 سال قبل ائیرپورٹس کی پارکنگ کے ٹھیکے لینا شروع کیے‘ اس زمانے میں پارکنگ کے سسٹم اچھے نہیں ہوتے تھے لہٰذا یہ لوگ ’’ڈنڈا مار‘‘ مشہور ہو گئے‘ یہ پھینٹا لگا کر پارکنگ… Continue 23reading عثمان بزدار کے ایک افسر پوری پنجاب بیوروکریسی میں’” ٹیکا‘ “کہلاتے ہیں‎ یہ روز شام سات بجے سے رات گیارہ بجے تک وزیراعلیٰ کے ساتھ ہوتے ہیں‎،قوم کو ٹیکا کیسے لگاتے ہیں ؟ جاوید چودھری کے حیران کن انکشافات ‎‎

میں کیوں کہ عمران خان کا فین ہوں‘ میں انہیں صرف پاکستان نہیں بلکہ پورے برصغیر اور سنٹرل ایشیا کی بھی آخری امید سمجھتا ہوں،یہ اڑ نہیں سکتے مگر اللہ تعالیٰ نے ان کو جتنا ٹیلنٹ عطا فرمایا ہے مجھے یقین ہے یہ اگر کوشش کریں تو یہ اڑ بھی سکتے ہیں لیکن۔۔۔اللہ کے علاوہ اس کائنات میں کوئی ناگزیر نہیں حتیٰ کہ عمران خان بھی نہیں

datetime 8  جولائی  2020

میں کیوں کہ عمران خان کا فین ہوں‘ میں انہیں صرف پاکستان نہیں بلکہ پورے برصغیر اور سنٹرل ایشیا کی بھی آخری امید سمجھتا ہوں،یہ اڑ نہیں سکتے مگر اللہ تعالیٰ نے ان کو جتنا ٹیلنٹ عطا فرمایا ہے مجھے یقین ہے یہ اگر کوشش کریں تو یہ اڑ بھی سکتے ہیں لیکن۔۔۔اللہ کے علاوہ اس کائنات میں کوئی ناگزیر نہیں حتیٰ کہ عمران خان بھی نہیں

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )جاوید چودھری اپنے ایک گزشتہ کالم ’’ کرسی کسی کی وفادار نہیں ہوتی جناب ‘‘ میں لکھتےہیں کہ ۔۔۔۔ہمیں چاہیے ہم اگر کوئی براعظم اٹھا کر اس کابینہ کے حوالے نہیں کر سکتے تو ہم عمران خان کو کم از کم اقوام متحدہ کا صدر ہی بنا دیں تاکہ یہ جی بھر… Continue 23reading میں کیوں کہ عمران خان کا فین ہوں‘ میں انہیں صرف پاکستان نہیں بلکہ پورے برصغیر اور سنٹرل ایشیا کی بھی آخری امید سمجھتا ہوں،یہ اڑ نہیں سکتے مگر اللہ تعالیٰ نے ان کو جتنا ٹیلنٹ عطا فرمایا ہے مجھے یقین ہے یہ اگر کوشش کریں تو یہ اڑ بھی سکتے ہیں لیکن۔۔۔اللہ کے علاوہ اس کائنات میں کوئی ناگزیر نہیں حتیٰ کہ عمران خان بھی نہیں

میری تنخواہ 14 سو روپے تھی اور کام چپڑاسی کا تھا‘ میں سینئرز کے لیے چائے لاتا تھا‘ کولر سے پانی لا کر دیتا تھا اور ان کے کندھے بھی دباتا،میرے پاس سائیکل بھی نہیں تھی‘ میں روز چھ کلو میٹر پیدل چل کر دفتر پہنچتا تھا،مالی خسارہ پورا کرنے کیلئے دوسری نوکری بھی کی ،پیدل زندگی سے لگژری لائف تک کیسے پہنچا ؟ایک اللہ پھر بھروسہ دوسرا ۔۔۔جاوید چودھری نے کامیابی کا اصول سامنے رکھ دیا

datetime 30  اپریل‬‮  2020

میری تنخواہ 14 سو روپے تھی اور کام چپڑاسی کا تھا‘ میں سینئرز کے لیے چائے لاتا تھا‘ کولر سے پانی لا کر دیتا تھا اور ان کے کندھے بھی دباتا،میرے پاس سائیکل بھی نہیں تھی‘ میں روز چھ کلو میٹر پیدل چل کر دفتر پہنچتا تھا،مالی خسارہ پورا کرنے کیلئے دوسری نوکری بھی کی ،پیدل زندگی سے لگژری لائف تک کیسے پہنچا ؟ایک اللہ پھر بھروسہ دوسرا ۔۔۔جاوید چودھری نے کامیابی کا اصول سامنے رکھ دیا

میرے والد مجھے وکیل بنانا چاہتے تھے یا پھر سی ایس پی دیکھنا چاہتے تھے لیکن میں صحافی بننا چاہتا تھا‘میں نے لاء کی تعلیم درمیان میں چھوڑی‘ پنجاب یونیورسٹی سے بھاگا اور اسلامیہ یونیورسٹی بہاولپور میں جرنلزم میں داخلہ لے لیا‘ یونیورسٹی میں پہلی پوزیشن حاصل کی‘ گولڈ میڈل لیا اور 1992ء میں نوائے… Continue 23reading میری تنخواہ 14 سو روپے تھی اور کام چپڑاسی کا تھا‘ میں سینئرز کے لیے چائے لاتا تھا‘ کولر سے پانی لا کر دیتا تھا اور ان کے کندھے بھی دباتا،میرے پاس سائیکل بھی نہیں تھی‘ میں روز چھ کلو میٹر پیدل چل کر دفتر پہنچتا تھا،مالی خسارہ پورا کرنے کیلئے دوسری نوکری بھی کی ،پیدل زندگی سے لگژری لائف تک کیسے پہنچا ؟ایک اللہ پھر بھروسہ دوسرا ۔۔۔جاوید چودھری نے کامیابی کا اصول سامنے رکھ دیا

ندیم افضل چن نے مختار کو ٹھیک بتایا تھا‘ آپ بھی روز صبح اٹھ کر خود کو مختار سمجھیں اور خود کو کہیں اوئے مختاریا۔۔۔ حکومت نے ٹیسٹ کٹس کس خوف لیٹ منگوائی ، انہیں کس چیز کا خدشہ تھا ؟ ملک میں افراتفری کی وجہ سے حکومت کیوں گو سلو پالیسی پر چل رہی ہے ؟ اگر پاکستان میں پانچ ہزار مریض ہو گئے تو کیا ہو گا ؟ انتباہ جاری

datetime 3  اپریل‬‮  2020

ندیم افضل چن نے مختار کو ٹھیک بتایا تھا‘ آپ بھی روز صبح اٹھ کر خود کو مختار سمجھیں اور خود کو کہیں اوئے مختاریا۔۔۔ حکومت نے ٹیسٹ کٹس کس خوف لیٹ منگوائی ، انہیں کس چیز کا خدشہ تھا ؟ ملک میں افراتفری کی وجہ سے حکومت کیوں گو سلو پالیسی پر چل رہی ہے ؟ اگر پاکستان میں پانچ ہزار مریض ہو گئے تو کیا ہو گا ؟ انتباہ جاری

سینئر کالم نگار جاوید چودھری اپنے کالم ’’ اوئے مختاریا ‘‘ میں لکھتے ہیں کہ ۔۔۔۔یہ اپنی زندگی کے لیے بھی حکومت کی وارننگ ماننے کے لیے تیار نہیں ہیں‘ حکومت کو یہ رٹ دوبارہ بحال کرنی ہو گی‘ حکومت فیصلہ کر لے ہم نے ریاست کو ریاست بنانا ہے‘ ریاست جب کوئی اعلان کرے… Continue 23reading ندیم افضل چن نے مختار کو ٹھیک بتایا تھا‘ آپ بھی روز صبح اٹھ کر خود کو مختار سمجھیں اور خود کو کہیں اوئے مختاریا۔۔۔ حکومت نے ٹیسٹ کٹس کس خوف لیٹ منگوائی ، انہیں کس چیز کا خدشہ تھا ؟ ملک میں افراتفری کی وجہ سے حکومت کیوں گو سلو پالیسی پر چل رہی ہے ؟ اگر پاکستان میں پانچ ہزار مریض ہو گئے تو کیا ہو گا ؟ انتباہ جاری

شعیب اختر کھلاڑی نہیں بن سکتا تھا‘ اس کے جسم میں کونسے چار بڑے نقائص تھے؟ معذوری کے باوجود اس نے پوری دنیا کو حیران کردیا، یہ معجزہ کیسے ہوا؟ راولپنڈی ایکسپریس کس کھیل میں مرتے مرتے بچے لیکن وہ باز نہ آیا؟سابق فاسٹ بائولر معذوری سے دنیا کے تیز رفتار بائولر کیسے بن گئے ؟ چونکا دینے والی تفصیلات

datetime 25  فروری‬‮  2020

شعیب اختر کھلاڑی نہیں بن سکتا تھا‘ اس کے جسم میں کونسے چار بڑے نقائص تھے؟ معذوری کے باوجود اس نے پوری دنیا کو حیران کردیا، یہ معجزہ کیسے ہوا؟ راولپنڈی ایکسپریس کس کھیل میں مرتے مرتے بچے لیکن وہ باز نہ آیا؟سابق فاسٹ بائولر معذوری سے دنیا کے تیز رفتار بائولر کیسے بن گئے ؟ چونکا دینے والی تفصیلات

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)شاہد خاندان کا پہلا فرد تھا جو کرکٹ کھیلنے کیلئے گرائونڈ میں اترا‘ یہ ایک نیم دیہی خاندان تھا‘ ان کے والد ملک محمد اختر گوجر خان کے ایک پسماندہ گائوں جلیاری معظم شاہ کے رہنے والے تھے‘ وہ پڑھے لکھے تھے لہٰذا انہیں ریلوے میں جونیئر افسر کی ملازمت مل گئی… Continue 23reading شعیب اختر کھلاڑی نہیں بن سکتا تھا‘ اس کے جسم میں کونسے چار بڑے نقائص تھے؟ معذوری کے باوجود اس نے پوری دنیا کو حیران کردیا، یہ معجزہ کیسے ہوا؟ راولپنڈی ایکسپریس کس کھیل میں مرتے مرتے بچے لیکن وہ باز نہ آیا؟سابق فاسٹ بائولر معذوری سے دنیا کے تیز رفتار بائولر کیسے بن گئے ؟ چونکا دینے والی تفصیلات