گوگل سرچ میں نیا مصنوعی ذہانت ٹول شامل کرنے کا اعلان

  ہفتہ‬‮ 17 اکتوبر‬‮ 2020  |  18:02

نیویارک(این این آئی )دنیا کے مقبول ترین سرچ انجن گوگل کے سرچ میں نئے آرٹیفیشل انٹیلیجنس کے ٹول کو جلد شامل کرنے کا اعلان کیا ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق گوگل کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ سرچ انجن میں یہ نئی تبدیلی اگلے چند ماہ یا ہفتوں میںتمام صارفین کو فراہم کی جائے گی۔گوگل کے مطابق سرچ انجن میں جلد شامل ہونے والی یہ نئی تبدیلی آرٹیفیشل انٹیلیجنس (مصنوعی ذہانت)اور مشین لرننگ تکنیک کے ذریعے کام کرے گا جس سے صارفین کو کچھ بھی سرچ کرنے پر پہلے سے بہتر نتائج ملیں گے۔سب سے خاص بات یہ


ہے کہ اب گوگل پر صارفین جتنی بھی غلط اسپیلنگ لکھیں گے تو اس کے باوجود بھی یہ صارف کو درست نتائج فراہم کرے گا۔گوگل کا دعوی ہے کہ یہ تبدیلی اس ماہ کے آخر میں سرچ انجن میں شامل کر لی جائے گی جس سے صارفین کو ایک سرچ کے بعد 3 ملی سیکنڈ میں نتائج مل سکیں گے جب کہ غلط اسپیلنگ کے باوجود بھی صارفین کو بہتر نتائج ملیں گے۔


زیرو پوائنٹ

مولانا روم کے تین دروازے

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎

ہم تیسرے دروازے سے اندر داخل ہوئے‘ درویش اس کو باب گستاخاں کہتے تھے‘ مولانا کے کمپاﺅنڈ سے نکلنے کے تین اور داخلے کا ایک دروازہ تھا‘ باب عام داخلے کا دروازہ تھا‘ کوئی بھی شخص اس دروازے سے مولانا تک پہنچ سکتا تھا‘شاہ شمس تبریز بھی اسی باب عام سے اندر آئے تھے‘ مولانا صحن میں تالاب ....مزید پڑھئے‎