کاروباری ہفتے کے پہلے روز ہی ڈالر مزید مہنگا

  پیر‬‮ 23 ‬‮نومبر‬‮ 2020  |  12:39

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) انٹربینک میں ڈالر17 پیسے مہنگا ہوگیا۔مارکیٹ ذرائع کے مطابق تازہ اضافے کے بعد ڈالر160 روپے 73 پیسے سے بڑھ کر 160 روپے 90 پیسے کا ہو گیا۔واضح رہے کہ پاکستان میں ڈالر کی قیمت تنزلی کے بعدایک بار پھر تیزی کیساتھ بڑھنا شروع ہو چکی ہے۔ادائیگیوں اوردرآمدی شعبوں کی طلب بڑھنے سے گزشتہ ہفتے ڈالر کی قیمت رک گئی تھی۔زرمبادلہ کی مارکیٹوں میں گزشتہ ہفتے امریکی ڈالر کے مقابلے میں پاکستانی روپیہ تنزلی کا شکار رہا۔ انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت 3 ہفتوں کی بلند ترین سطح پہنچ گئی ہے۔گزشتہ کاروباری ہفتے کے دوران ڈالر کی


قیمت میں انٹر بینک میں 160جبکہ کے اوپن مارکیٹ میں 161ہو گئی ہے۔ ماہرین کی جانب سے یہ بیان سامنے آیا ہے کہ کرونا ویکسینز کے کامیاب تجربوں اور عالمی مارکیٹ میں کاروباری سرگرمیوں میں بحالی کا اشارہ ملنے کے بعد ڈالر کی مانگ میں اضافہ دیکھنے کو آرہا ہے۔ حکومت کی جانب سے کوویڈ ادویات کی درآمدات کو امپورٹ ڈیوٹی فری کرنے کے اعلان سے مستقبل میں ڈالر کی قدر بڑھنے کی افواہیں بھی زیرگردش رہیں۔گزشتہ ہفتے امریکی ڈالر، برطانوی پاؤنڈ، یورو کی قیمتوں میں اضافہ دیکھنے کو آیا ہے۔ انٹربینک میں ڈالر کی قدر 2.56 روپے بڑھ کر 160روپے 72پیسے پر بند ہوئی جبکہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں بھی ڈالر کیقدر2اعشاریہ 90پیسے کے اضافے سے161 روپے پر بند ہوئی۔انٹربینک مارکیٹ میں یوروکرنسی کی قدر بڑھ کر 190.79 روپے پرآگئی جبکہ اوپن مارکیٹ میں یوروکرنسی کی قدر 6 روپے بڑھ کر 191 روپے ہوگئی۔ انٹربینک میں برطانوی پاونڈ کی قدر5.11 روپے بڑھ کر 213.21 روپے ہوگئی جب کہ اوپن مارکیٹ میں برطانوی پاو?نڈ کی قدر 6 روپے بڑھ کر 213 روپے تک پہنچ گئی ہے۔


موضوعات:

زیرو پوائنٹ

ایک قیمتی سوال

چارلس ٹی میٹکلف  1785ءمیں کلکتہ میں پیدا ہوا تھا‘ والد ایسٹ انڈیا کمپنی میں ڈائریکٹر تھا اور کلکتہ میں تعینات تھا‘ چارلس نے لندن سے تعلیم حاصل کی اور 1801ءمیں واپس آ کر کمپنی کی نوکری کر لی‘ وہ بنگال کے گورنر جنرل لارڈ ویسلے کا پرائیویٹ سیکرٹری تھا‘ برطانیہ اس وقت نپولین بونا پارٹ سے لڑ رہا ....مزید پڑھئے‎

چارلس ٹی میٹکلف  1785ءمیں کلکتہ میں پیدا ہوا تھا‘ والد ایسٹ انڈیا کمپنی میں ڈائریکٹر تھا اور کلکتہ میں تعینات تھا‘ چارلس نے لندن سے تعلیم حاصل کی اور 1801ءمیں واپس آ کر کمپنی کی نوکری کر لی‘ وہ بنگال کے گورنر جنرل لارڈ ویسلے کا پرائیویٹ سیکرٹری تھا‘ برطانیہ اس وقت نپولین بونا پارٹ سے لڑ رہا ....مزید پڑھئے‎