دل کے ہسپتال پر دھاوا ایک سازش کے تحت کیا گیا، حملے میں ن لیگ ملوث ہے،وکیل کا تعلق مریم نواز اور حمزہ شہباز سے نکلا، دھماکہ خیز دعویٰ کر دیا گیا

  بدھ‬‮ 11 دسمبر‬‮ 2019  |  23:20

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان نے ایک نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ وکلا کی طرف سے دل کے ہسپتال پر دھاوا ایک سازش کے تحت کیا گیا، فیاض الحسن چوہان نے دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ اس میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے عناصر شامل تھے۔ انہوں نے کہاکہ میں جب جان بچا کر جا رہا تھا تو مجھ پر پیچھے سے فائر کیاگیا، میں برملا کہوں گا کہ ن لیگ کے ایکٹویسٹ اس میں شامل تھے، صوبائی وزیر اطلاعات نے کہاکہایک وکیل کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہے جس کا


مریم نواز اور حمزہ شہباز سے قریبی تعلق ہے، انہوں نے کہا کہ آہستہ آہستہ مزید انکشافات سامنے آنے کا سلسلہ جاری ہے، جنہیں میڈیا کے سامنے پیش کیاجائے گا۔ انہوں نے دعویٰ کرتے ہوئے کہاکہ مجھ پر تشدد کرنے والوں میں ن لیگ کا ایک کارکن بھی شامل ہے۔ فیاض الحسن چوہان نے کہاکہ مجھے میڈیا والوں نے تشدد کرنے والوں سے چھڑوایا، انہوں مزید کہا کہ پولیس والوں کو وکلاء جان سے مارنا چاہتے تھے۔

موضوعات: