انگلینڈ کیخلاف پانچویں میچ سے پہلے پاکستانی ٹیم کو شدید دھچکا اہم کھلاڑی میچ سے باہر ہوگئے

  بدھ‬‮ 28 ستمبر‬‮ 2022  |  12:45

لاہور ٗ راولپنڈی (این این آئی)پاکستان کرکٹ ٹیم کے فاسٹ بولر نسیم شاہ کو سینے میں انفیکشن اور تیز بخار کے سبب ہسپتال میں داخل کرا دیا گیا ، بدھ کو لاہور میں کھیلے جانے والے میچ سے باہرہوگئے ۔ذرائع کے مطابق نسیم شاہ کو مقامی ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں ان کے مختلف ٹیسٹ کرائے گئے ہیں اور وہ اب قدرے بہتر محسوس کررہے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ فاسٹ بولر کا ڈینگی ٹیسٹ بھی کرایا گیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ طبیعت کی ناسازی کی سبب نسیم شاہ انگلینڈ کے خلاف پانچویں میچ سے باہر ہوگئے دوسری جانب پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے باضابطہ طور پر تاحال ان کی طبیعت کے حوالے سے کچھ نہیں بتایا گیا ہے۔دوسری جانب پاکستان جونیئر لیگ میں شامل کھلاڑی غیرملکی کھلاڑیوں کے ساتھ کام کرنے کے منتظر ہیں۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق راولپنڈی ریڈرز اور حیدرآباد ہنٹرز کے کپتان ویسٹ انڈیز کے سابق کپتان ڈیرن سیمی اور نیوزی لینڈ کے جارح مزاج بیٹر کولن منرو کے ساتھ کام کرنے کے منتظر ہیں۔پاکستان جونیئر لیگ کی ٹیم راولپنڈی ریڈرز کے کپتان حبیب اللّٰہ نے کہا کہ لیگ کے اعلان کا سننا ہی سب سے بڑی خوشی تھی ڈرافت والے دن کو کبھی نہیں بھلا سکتا۔انہوں نے کہا کہ اس سطح پر پہلی مرتبہ لیگ ہو رہی ہے اس لیے پی جے ایل میں ٹیم کی قیادت کرنا اعزاز کی بات ہے۔حبیب اللّٰہ نے کہا کہ کولن منرو ٹیم کے مینٹور ہیں، میں ان سے بہت متاثر ہوں ، کولن منرو کا ایک الگ سا اعتماد ہے ان سے بہت کچھ سیکھوں گا۔

حیدرآباد ہنٹرز کے کپتان مرزا سعد بیگ کا کہنا ہے کہ دو مرتبہ کے ورلڈ چیمپئن کپتان ڈیرن سیمی کے ساتھ کام کرنا اعزاز ہوگا، ان سے سیکھنے کا فائدہ ہوگا۔ منتظر ہوں کہ لیگ شروع ہو اور ہم عظیم کھلاڑیوں کے ساتھ کام کریں اور ڈریسنگ روم شیئر کریں۔انہوں نے کہا کہ میرے والد کرکٹ کھیلا کرتے تھے انہیں دیکھتے ہوئے کرکٹ شروع کی، ڈرافٹنگ پوری فیملی نے لائیو دیکھی اور مجھے مبارک باد دی۔واضح رہے کہ پہلی مرتبہ ہونے والی پاکستان جونیئر لیگ کے مقابلے 6 اکتوبر سے قذافی اسٹیڈیم لاہور میں شروع ہوں گے۔



موضوعات:

زیرو پوائنٹ

تیونس تمام

حبیب علی بورقیبہ تیونس کے بانی ہیں‘ وکیل اور سیاست دان تھے‘ قائداعظم محمد علی جناح اور اتاترک کے فین تھے اورپاکستان کی تشکیل کے وقت مصر میں پناہ گزین تھے‘ پاکستان بنا تو حبیب علی بورقیبہ نے قائداعظم کو مبارک باد کا ٹیلیکس بھجوایا اور اس کے ساتھ ہی تیونس اور پاکستان کے سفارتی تعلقات کا آغاز ہو گیا‘ ....مزید پڑھئے‎

حبیب علی بورقیبہ تیونس کے بانی ہیں‘ وکیل اور سیاست دان تھے‘ قائداعظم محمد علی جناح اور اتاترک کے فین تھے اورپاکستان کی تشکیل کے وقت مصر میں پناہ گزین تھے‘ پاکستان بنا تو حبیب علی بورقیبہ نے قائداعظم کو مبارک باد کا ٹیلیکس بھجوایا اور اس کے ساتھ ہی تیونس اور پاکستان کے سفارتی تعلقات کا آغاز ہو گیا‘ ....مزید پڑھئے‎