بدھ‬‮ ، 24 جولائی‬‮ 2024 

پاکستان کا دبنگ فیصلہ، سرحد کی دوسری جانب دہشت گردوں کے ٹھکانے ،سلیپر سیل اور ہیڈ کوارٹر ز،اب کچھ نہیں بچے گا

datetime 20  فروری‬‮  2017
ہمارا واٹس ایپ چینل جوائن کریں

لاہور(آئی این پی) صوبائی وزیر قانو ن رانا ثنا اللہ خان نے کہا ہے کہ وزیراعظم نوا ز شریف اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے سرحد پار چھپے دہشتگردوں کیخلاف کارروائیوں کو مزید تیز کرنے کا فیصلہ کر لیا ‘ سرحد کی دوسری جانب دہشتگردوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنا یا جائے گا جہاں شدت پسندوں نے اپنے سلیپر سیل اور ہیڈ کوارٹر ز بنا رکھے ہیں ، اور وہ وہاں بیٹھ کر ایک منظم پلاننگ کے پاکستان میں آکر کارروائیاں

کرتے ہیں اور واپس فرار ہوجاتے ہیں‘ آرٹیکل 245کے تحت ملک میں حالات کو مد نظر رکھتے ہوئے رینجرز کو طلب کیا جاسکتا ہے ،جس کی ایک مثال ہے کہ جہاں پر پولیس کام نہیں آتی وہاں پر سی ٹی ڈی کو طلب کیا جاتا ہے‘پی ایس ایل کے فائنل میں سکیورٹی کیلئے پلاننگ مکمل کرلی ہے اور چاہتے ہیں غیر ملکی کھلاڑی پاکستان آئیں‘ ہم چاہتے ہیں ‘پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ بحال ہو اور چاہتے ہیں کہ فائنل کھیلنے کیلئے غیر ملکی کھلاڑی بھی لاہور آئیں۔سوموار کے روز اپنے انٹر ویو میں رانا ثناء اللہ خان نے کہا کہ وزیراعظم اور آرمی چیف کے فیصلے کے بعد سرحد کی دوسری جانب دہشتگردوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنا یا جائے گا جہاں شدت پسندوں نے اپنے سلیپر سیل اور ہیڈ کوارٹر ز بنا رکھے ہیں ، اور وہ وہاں بیٹھ کر ایک منظم پلاننگ کے پاکستان میں آکر کارروائیاں کرتے ہیں اور واپس فرار ہوجاتے ہیں ۔وزیرقانون نے پنجاب میں رینجرز کی تعیناتی کے حوالے سے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ آرٹیکل 245کے تحت ملک میں حالات کو مد نظر رکھتے ہوئے رینجرز کو طلب کیا جاسکتا ہے ،جس کی ایک مثال ہے کہ جہاں پر پولیس کام نہیں آتی وہاں پر سی ٹی ڈی کو طلب کیا جاتا ہے اور اسی طرح حالات پر قابو پانے کیلئے نیچے سے اوپر کی جانب جایا جاتا ہے کیونکہ ملک میں امن و امان سر فہرست ہیں ۔انہوں نے کہاکہ ملک میں دہشتگردی کیخلاف جتنے آپریشن ابھی تک ہورہے ہیں

اسی آرٹیکل کے تحت کئے جارہے ہیں۔اب جو نوٹیفکیشن جاری کیاگیاہے اس کے تحت رینجرز اور سی ٹی ڈی کو مشترکہ آپریشن کرنے کے اختیار دئیے گئے ہیں جبکہ رینجرز کو سرچ اور گرفتار کرنے کے اختیارکے ساتھ ساتھ دہشتگردی کیخلاف ایکشن لینے اور موثر انداز میں کارروائی کرنے کیلئے تمام اختیارات ہونگے۔ہم نے ایک جے آئی ٹی تشکیل دی ہے جس میں ایک اہلکار رینجرزکا شامل ہوگا، اگر کارروای کے دوران کوئی اسلحہ ملتا ہے اور دہشتگردی کا مقدمہ درج نہیں ہوتا تو وہ معاملہ پولیس کے پاس ہی رہے گا۔

راناثنا اللہ نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ لاہور میں 220سلیپر سیل خبر کہاں سے آئی ہے؟ جس کے پاس یہ خبر ہے میرا دعوی ہے کہ وہ ہمیں 200 نہیں صرف 20کاپتہ بتا دے سی ٹی ڈی ان کیخلاف فورا کارروائی کرے گی اور ملزمان کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔

موضوعات:



کالم



جارجیا میں تین دن


یہ جارجیا کا میرا دوسرا وزٹ تھا‘ میں پہلی بار…

کتابوں سے نفرت کی داستان(آخری حصہ)

میں ایف سی کالج میں چند ہفتے یہ مذاق برداشت کرتا…

کتابوں سے نفرت کی داستان

میں نے فوراً فون اٹھا لیا‘ یہ میرے پرانے مہربان…

طیب کے پاس کیا آپشن تھا؟

طیب کا تعلق لانگ راج گائوں سے تھا‘ اسے کنڈیارو…

ایک اندر دوسرا باہر

میں نے کل خبروں کے ڈھیر میں چار سطروں کی ایک چھوٹی…

اللہ معاف کرے

کل رات میرے ایک دوست نے مجھے ویڈیو بھجوائی‘پہلی…

وہ جس نے انگلیوں کوآنکھیں بنا لیا

وہ بچپن میں حادثے کا شکار ہوگیا‘جان بچ گئی مگر…

مبارک ہو

مغل بادشاہ ازبکستان کے علاقے فرغانہ سے ہندوستان…

میڈم بڑا مینڈک پکڑیں

برین ٹریسی دنیا کے پانچ بڑے موٹی ویشنل سپیکر…

کام یاب اور کم کام یاب

’’انسان ناکام ہونے پر شرمندہ نہیں ہوتے ٹرائی…

سیاست کی سنگ دلی ‘تاریخ کی بے رحمی

میجر طارق رحیم ذوالفقار علی بھٹو کے اے ڈی سی تھے‘…