ہمیں انتخابی مہم چلانے سے روکا جارہا ہے،بڑی سیاسی جماعت کے سربراہ نے سنگین الزام لگا دیا

  ہفتہ‬‮ 7 جولائی‬‮ 2018  |  16:19

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) ایم کیوایم کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار نے الزام لگایا ہے کہ ہمارے کارکنان کی گرفتاریوں کا سلسلہ جاری ہے اور کراچی میں انتخابی مہم اور جھنڈے لگانے سے روکا جارہا ہے، کارکنوں میں ڈر اور خوف کی فضا پیدا ہونے پر تشویش ہے ،بتایا جائے چھاپے اور گرفتاریاں کیوں کی جارہی ہیں؟ ہمارے کارکن اور ووٹرز کھل کر انتخابی عمل میں حصہ نہیں لے سکتے، سیاستدانوں کو عدالتوں سے سزائیں افسوسناک ہے۔جوکچھ ہواوہ ن لیگ کی کوتاہیوں کانتیجہ ہے،نوازشریف کووطن واپس آکرگرفتاری دینی چاہیے۔کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ کراچی


کے ووٹرز کو حق رائے دہی سے محروم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے، مردم شماری میں بھی کراچی اور حیدرآباد کے شہریوں سے فراڈ ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمارے کارکنان کی گرفتاریوں کا سلسلہ جاری ہے، کارکنوں میں ڈر اور خوف کی فضا پیدا کردی گئی ہے جس پر تشویش ہے، بتایا جائے چھاپے اور گرفتاریاں کیوں کی جارہی ہیں؟ ہمارے کارکن اور ووٹرز کھل کر انتخابی عمل میں حصہ نہیں لے سکتے، کارکنوں کی گرفتاریاں قبل ازوقت انتخابات اور دھاندلی ہے۔ایم کیوایم رہنما کا کہنا تھاکہ کراچی میں انتخابی مہم اور جھنڈے لگانے سے روکا جارہا ہے، شہر میں صرف پی ٹی آئی اور دیگر جماعتوں کے بینرز لگے ہوئے ہیں، شہر کے مختلف علاقوں سے ایم کیوایم کے بینرز ہٹادیئے گئے ہیں جس سے ایسا لگ رہا ہے کہ کچھ جماعتیں منظور نظر ہیں۔نوازشریف کی سزا کے فیصلے پر رد عمل میں فاروق ستار نے کہا کہ سیاسی رہنماں کو عدالتوں سے سزا ہونا افسوسناک بات ہے لیکن سپریم کورٹ نے کسی کو نااہل قرار دیا تو فیصلے کو ماننا چاہیے اور کسی کے خلاف ٹھوس شواہد اور ثبوت کی بنا پر ہی مقدمات بننے چاہئیں، کیس میں عدل و انصاف کے تقاضے پورے ہونے چاہئیں۔انہوں نے کہا کہ نوازشریف نے کہا تھا وہ نیب اور احتساب عدالتوں کا نظام درست کریں گے، وہ پانچ سال حکومت میں رہے لیکن نیب قوانین میں ترمیم نہیں کی۔

موضوعات:

loading...