زینب قتل کیس میں بے شرمی اور بے حسی کی انتہا کرنیوالی پنجاب پولیس نہ سدھری،فیصل آباد میں زیادتی کا شکار ہونیوالی بچی کے والد سے ایس ایچ او کیا چیز مانگتا رہا، افسوسناک صورتحال

  اتوار‬‮ 14 جنوری‬‮ 2018  |  12:43

فیصل آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)پنجاب میں پولیس کی نا اہلی اور نالائقی زینب قتل کیس میں کھل کر سامنے آچکی ہے، رشوت ستانی کی کہانیاں تو پہلے سے ہی عام تھیں، اب انکشاف ہوا ہے کہ فیصل آباد میں زیادتی کا شکار ہونے والی بچی کے ورثا سے مقدمے کے اندراج کیلئے پولیس نے رشوت طلب کی ہے ۔ پاکستان کے موقر قومی اخبار خبریں کی رپورٹ کے مطابق فیصل آباد کے تھانہ فیکٹری ایرا کے علاقہ کچی آبادی محلہ اسلام پورہ گلی نمبر9کے رہائشی ارشاد نے مقدمہ درج کرواتے ہوئے موقف اختیار کیا ہے کہ 6جنوری کو رات 9بجے میری

سات سالہ بیٹی عائشہ بی بی دکان پر سودا سلف لینے گئی تو راستے میں 20سالہ امیر حمزہ سکنہ ایوب کالونی گلی نمبر 8اسے ورغلا کر اپنے گھر لے گیا اور زبردستی زیادتی کی کوشش کی۔ بچی کے شور مچانے پراہل محلہ اکٹھے ہوئے تو ملزم فرار ہو گیا۔ پولیس نے ساتھ روز گزر جانے کے بعد ارشاد کی درخواست پر مقدمہ درج کر لیا ۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں