pakistan-cricket-team

پاکستانی ٹیم نے سابق آسٹریلوی کپتان کو تنقید پر آئینہ دکھا دیا ، بڑے ریکارڈز قائم کر دیئے

  بدھ‬‮ 11 جنوری‬‮ 2017  |  6:00
سڈنی(این این آئی)پاکستان سے سیریز میں کراؤڈ کے نئے ریکارڈز نے ای ین چیپل کو آئینہ دکھا دیا ٗ برسبین، میلبورن اور سڈنی تینوں وینیوز پر بڑی تعداد میں تماشائیوں نے مقابلوں کا لطف اٹھایا، گابا ٹیسٹ کے آخر 2 روز اور باکسنگ ڈے معرکے کے ابتدائی مرحلے میں زبردست کرکٹ دیکھنے کو ملی۔سابق آسٹریلوی کپتان ای ین چیپل نے پاکستان سے حالیہ ٹیسٹ سیریز کو مکمل طور پر فلاپ قرار دیتے ہوئے اپنے بورڈز سے آئندہ گرین کیپس کو مدعوہی نہ کرنے کا مطالبہ کیا، دوسری جانب اعدادوشمارکے مطابق موسم گرما میں شائقین کی ریکارڈ تعداد جنوبی افریقہ اور

(خبر جا ری ہے)

اس کے بعد پاکستان کے ساتھ مقابلوں سے لطف اندوز ہوئی۔ کرکٹ آسٹریلیا کیلئے بھی ایک نان ایشز سیزن کافی نفع بخش ثابت ہوا۔ مجموعی طور پر6 میچز کے دوران5 لاکھ 21 ہزار 725 تماشائیوں نے اسٹیڈیمز کا رخ کیا، کسی بھی غیر ایشز مقابلوں میں تماشائیوں کا گذشتہ ریکارڈ 5 لاکھ 15 ہزار 157 تھا جو2005-06میں ویسٹ انڈیز اور جنوبی افریقہ کے خلاف سیریز میں بنا۔پاکستان سے پہلے ٹیسٹ کے موقع پر برسبین کے گابا اسٹیڈیم میں مجموعی طور پر 78 ہزار سے زائد تماشائی آئے ٗ 1979 میں ریکارڈز کے آغاز سے یہ اس وینیو کا کسی نان

(خبر جا ری ہے)

ایشز ٹیسٹ کیلئے تماشائیوں کی سب سے بڑی تعداد ہے۔ اسی طرح میلبورن میں باکسنگ ڈے کے موقع پر 63 ہزار 478 کا کراؤڈ ایم سی جی میں موجود تھا، اسی وینیو پر 2004 میں پاکستان کے میچ میں 61 ہزار 552 تماشائی آئے تھے ٗکرکٹ آسٹریلیا بھی رواں سیزن میں تماشائیوں کی بہت بڑی تعداد کی وجہ سے کافی خوش ہے ٗیہ سیزن تمام میزبان ایسوسی ایشنز کیلیے بھی منافع بخش ثابت ہوا۔

سڈنی(این این آئی)پاکستان سے سیریز میں کراؤڈ کے نئے ریکارڈز نے ای ین چیپل کو آئینہ دکھا دیا ٗ برسبین، میلبورن اور سڈنی تینوں وینیوز پر بڑی تعداد میں تماشائیوں نے مقابلوں کا لطف اٹھایا، گابا ٹیسٹ کے آخر 2 روز اور باکسنگ ڈے معرکے کے ابتدائی مرحلے میں زبردست کرکٹ دیکھنے کو ملی۔سابق آسٹریلوی کپتان ای ین چیپل نے پاکستان سے حالیہ ٹیسٹ سیریز کو مکمل طور پر فلاپ قرار دیتے ہوئے اپنے بورڈز سے آئندہ گرین کیپس کو مدعوہی نہ کرنے کا مطالبہ کیا، دوسری جانب اعدادوشمارکے مطابق موسم گرما میں شائقین کی ریکارڈ تعداد جنوبی افریقہ اور اس کے بعد پاکستان کے ساتھ مقابلوں سے لطف اندوز ہوئی۔ کرکٹ آسٹریلیا کیلئے بھی ایک نان ایشز سیزن کافی نفع بخش ثابت ہوا۔
مجموعی طور پر6 میچز کے دوران5 لاکھ 21 ہزار 725 تماشائیوں نے اسٹیڈیمز کا رخ کیا، کسی بھی غیر ایشز مقابلوں میں تماشائیوں کا گذشتہ ریکارڈ 5 لاکھ 15 ہزار 157 تھا جو2005-06میں ویسٹ انڈیز اور جنوبی افریقہ کے خلاف سیریز میں بنا۔پاکستان سے پہلے ٹیسٹ کے موقع پر برسبین کے گابا اسٹیڈیم میں مجموعی طور پر 78 ہزار سے زائد تماشائی آئے ٗ 1979 میں ریکارڈز کے آغاز سے یہ اس وینیو کا کسی نان ایشز ٹیسٹ کیلئے تماشائیوں کی سب سے بڑی تعداد ہے۔
اسی طرح میلبورن میں باکسنگ ڈے کے موقع پر 63 ہزار 478 کا کراؤڈ ایم سی جی میں موجود تھا، اسی وینیو پر 2004 میں پاکستان کے میچ میں 61 ہزار 552 تماشائی آئے تھے ٗکرکٹ آسٹریلیا بھی رواں سیزن میں تماشائیوں کی بہت بڑی تعداد کی وجہ سے کافی خوش ہے ٗیہ سیزن تمام میزبان ایسوسی ایشنز کیلیے بھی منافع بخش ثابت ہوا۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

loading...

روزانہ کی دس بڑی خبریں بذریعہ ای میل حاصل کریں

بذریعہ ای میل آپ کو دس بڑی خبروں کے ساتھ ساتھ کرنسی اور سونے کے ریٹس بھی بھیجے جائیں گے۔