بے نامی اکائونٹس کے بعدسندھ میں اربوں روپے مالیت کی بے نامی زمینوںو جائیدادوں کا کیس سامنے آگیا سابق ڈی سی ملیرنے راز اگل دئیے، سنسنی خیز انکشافات

  ہفتہ‬‮ 12 جنوری‬‮ 2019  |  16:56

کراچی(نیوز ڈیسک)سابق ڈی سی ملیرقاضی جان محمد نے ہیرا پھیری، فنڈز خرد برد کے راز اگل دئیے،بے نامی اکائونٹ کے بعد اربوں روپے مالیت کی بے نامی زمینوں کا کیس سامنے آگیا ہے۔ترجمان نیب کے مطابق سابق ڈی سی ملیر قاضی جان کے خلاف نئے شواہد مل گئے ہیں۔ گرفتار سابق ڈی سی ملیرجان محمد کی نشاندہی پر جائیدادوں کا سراغ لگالیا گیاہے۔بے نامی اکائونٹ کے بعد اربوں روپے مالیت کی بے نامی زمینوں کا کیس سامنے آگیا، اربوںروپے کی زمین گھارو، میرپور ساکرو، حیدرآباد میں الاٹ کی گئیں۔ذرائع کے مطابق حیدرآباد میں زمین سابق وزیر بلدیات کے فرنٹ مین


کی بتائی جاتی ہے، گھارو، ٹھٹھہ، میرپور ساکرو میں شوکت نیازی کو جعلی الاٹمنٹ کی گئی۔ذرائع نے بتایاکہ نیب رابطے کے بعد اتھارٹی نے زمینوں کی الاٹمنٹ منسوخ کردی، الاٹمنٹ منسوخی کے آرڈر کی کاپی بھی منظرعام پر آگئی ہے ۔ حیدرآباد میں الاٹ زمینوں کے مالکان سے بھی تفتیش کا فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

موضوعات:

loading...