انٹرویو کے دوران اُکسانے کی کوشش پر مریم نواز کے بیٹے نے عمران خان اور مولانا طارق جمیل کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ سب کے منہ کھلے کے کھلے رہ گئے

  پیر‬‮ 18 ستمبر‬‮ 2017  |  12:32

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)گھڑ سواری میں کوئی مذائقہ نہیں، ہمارے نبی کریمﷺ نے ہر طرح کی سواری کر کے مثال قائم کی، لباس وہ پہننا چاہئے جو مناسب لگے، عمران خان کے طرز زندگی پر بات نہیں کروں گا ، یہ ان کی ذاتی زندگی میں دخل اندازی کے مترادف ہو گا، چیف ایڈیٹر روزنامہ پاکستان اسلام آباد اور روزٹی وی کے مالک سردار خان نیازی کا جاتی امرا رائیونڈ میںسابق وزیراعظم نواز شریف کے نواسے، کیپٹن صفدر اور مریم نواز کے نوجوان بیٹے جنید صفدر سے انٹرویو، اُکسانے پر بھی نہایت تحمل اور بردباری سے سوالات کے جوابات نے سب

کو حیران کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی روز نیوز کے مالک اور چیف ایڈیٹر روزنامہ پاکستان اسلام آباد نے جاتی امرا رائیونڈ میں سابق وزیراعظم نواز شریف کے نواسے اور کیپٹن صفدر اور مریم نواز کے بیٹے جنید صفدر کا انٹرویو کیا۔ اس دوران جاتی امرا فارم ہائوس کے وسیع لان میں براجمان جنید صفدر نہایت بردباری اور تحمل سے مشکل سوالات کا جواب دیتے رہے۔ سردار خان نیازی کے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے جنید صفدر کا کہنا تھا کہ گھڑ سواری کرنا کوئی بری بات نہیں، ہمارے نبی کریمﷺ نے ہر طرح کی سواری کی، پولو میرا پسندیدہ کھیل ہے،میرے نانا نواز شریف میرے ہیرو ہیں،میری نانی کلثوم نواز میری تعلیم کے حوالے سے مجھ پر کافی سختی کرتی ہیںجبکہ میری والدہ کا سارا فوکس سیاست کی جانب ہے،نانا نواز شریف سے بہت کچھ سیکھا، حال کی سیاست ماضی سے بہت مختلف ہے،سیاست عبادت سمجھ کر کرنی چاہئے، نانا ابو اور نانی کا پیار ہمیشہ سایہ فگن رہتا ہے۔ جنید صفدر کا کہنا تھا کہ سیاسیات کے طالبعلموں کو پارلیمنٹ میں انٹرشپ کا موقع ملنا چاہئے۔ اس موقع پر سردار خان نیازی نے جب جنید صفدرسے کہا کہ پرتعیش زندگی چھپا کر عام لوگوں کی طرح اپنا آپ شو کروانا منافقت تو ضرور سمجھی جائے گی مگر یہ عبادت بھی کیونکہ اس سے عام افراد کے جذبات کو ٹھیس نہیں پہنچے گی جس پر جنید صفدر کا کہنا تھا کہ پاکستان کے ایک بڑے اسلامی اسکالر مولانا طارق جمیل ہیں اور میں ان کو بہت پسند کرتا ہوں، ان کے ایک بیان میں انہوں نے بتایا کہ ہمارے نبی کریمﷺ نےہر طرح کی سواری کر کے ایک مثال قائم کی۔جنید صفدر کو اس موقع پر سردار خان نیازی نے جب عمران خان کی مثال دیتے ہوئے کہا کہ اس حوالے سے عمران خان اس دور میں ہمارے سامنے نہایت ایک عمدہ مثال موجود ہے۔وہ لندن ہیتھرو ائیرپورٹ پر جب اترتا ہے تو سوٹ زیب تن کر لیتا ہے اور جب راولپنڈی بینظیر بھٹو ائیرپورٹ پر اترتا ہے تو اس کے واش روم میں جا سوٹ اتارکر شلوار قمیض اور چپل زیب تن کر لیتا ہے تاکہ عام عوام کو یہ احساس ہو کہ وہ ان میں سے ہی ہے اور پرتعیش زندگی نہیں گزارتا۔ سردار خان نیازی کے سادہ مگر اکسانے والے انداز اور اس بات پر جنید صفدر نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ انسان کو ہمیشہ ہی مناسب لباس کا انتخاب کرنا چاہئے۔چپل پہننے سے کوئی آدمی نہیں بن جاتا بہرحال یہ خان صاحب کی ذاتی زندگی ہےجس پرتبصرہ یا کسی قسم کی بات دخل اندازی تصور ہو گی مگر میرا ذاتی خیال ہے کہ انسان کو وہ چیز استعمال کرنی چاہئے جو مناسب اور میسر ہو یا پھر اتنے بڑے دعوے نہیں کرنی چاہئے اور اگر کوئی ایسی بات ہو بھی جائے تو انسان کو فوری طور پر معافی مانگ لینی چاہئے بجائے کہ اپنی بات کو ضد اور انا کا مسئلہ بنا لیں۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں