نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں مساجد پر دہشت گرد حملے ،4 پاکستانیوں کے زخمی پانچ کے لاپتہ ہونے کی اطلاعات، حکومت نے بڑا اعلان کردیا

  جمعہ‬‮ 15 مارچ‬‮ 2019  |  21:06
اسلام آباد (این این آئی) ترجمان دفتر خارجہ نے نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں مساجد پر دہشت گرد حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ ہم غمزدہ خاندانوں کے دکھ میں شریک ہیں۔ جمعہ کو ایک بیان میں ترجمان نے کہا کہ پاکستان دہشت گردی کے واقعہ کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کرتا ہے۔ترجمان نے کہاکہ دہشت گردی کے اس وقعہ میں چالیس سے زائد افراد جاں بحق اور بیس سے زائد شدید زخمی ہیں۔ ترجمان نے کہاکہ اس مشکل گھڑی میں پاکستان کے عوام اور حکومت نیوزی لینڈ کے عوام اور حکومت کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتی ہے۔ترجمان نے کہاکہ ہم غمزدہ خاندانوں کے دکھ میں شریک ہیں۔ ترجمان نے کہاکہ قیمتی جانوں کے ضیاع پر تعزیت کا اظہار کرتے ہیں۔ ترجمان نے کہاکہ زخمیوں کی جلد صحتیابی کے لئے دعاگو ہیں۔ ترجمان نے کہاکہ یہ ضمیر اور تعلق کی آزادی کی اقدار پر حملہ ہے جو پوری انسانیت کیلئے مشترک ہیں۔ ترجمان نے کہاکہ پاکستان امید کرتا ہے کہ نیوزی لینڈ اس گھناونے واقعہ کے ذمہ داروں کو جلد کیفر کردار تک پہنچائیگا۔ ترجمان نے کہاکہ تمام متاثرہ خاندانوں کی حفاظت اور سلامتی کو یقینی بنایا جائے۔ ترجمان کے مطابق پاکستان کا ہائی کمیشن متعلقہ حکام سے رابطے میں ہے۔ ترجمان نے کہاکہ نیوزی لینڈ میں 4 پاکستانیوں کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں، مذید تحقیقات جاری ہیں۔ ترجمان کے مطابق چاروں زخمی پاکستانی ہسپتال میں زیر علاج ہیں۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق 5 پاکستانی لاپتہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ زخمیوں کی حالت کے بارے میں کچھ کہنا قبل از وقت ہو گا۔  ترجمان دفتر خارجہ نے نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں مساجد پر دہشت گرد حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ ہم غمزدہ خاندانوں کے دکھ میں شریک ہیں۔

موضوعات:

loading...