دورہ ملائیشیا ، انڈونیشا منسوخ، سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کے پاکستان کے بعد دورہ بھارت کا آغاز،اربوں ڈالرز کے معاہدے ہونگے

  منگل‬‮ 19 فروری‬‮ 2019  |  22:23
ریاض، نئی دہلی(آن لائن)سعودی ولی عہد محمد بن سلمان دورہ پاکستان مکمل کرنے کے بعد دورہ بھارت کے لیے نئی دہلی روانہ ہوگئے۔خیال رہے کہ سعودی ولی عہد اپنے دورہ ایشیا پر ہیں جہاں وہ جنوبی ایشیا اور مشرقی ایشیا کی اہم ریاستوں میں چند روز قیام کرنے کے ساتھ ساتھ اہم معاہدے بھی کر رہے ہیں۔محمد بن سلمان دورہ نئی دہلی کے دوران بھارتی وزیرِاعظم نریندر مودی سمیتاہم بھارتی شخصیات سے دوطرفہ امور پر بات چیت کریں گے۔ عرب میڈیا کے مطابق بھارت اور سعودی عرب کے درمیان دوطرفہ تجارت کا حجم 27 ارب 48 کروڑ ڈالر سے زائد ہے جو نئی دہلی کو ریاض کا چوتھا بڑا تجارتی شراکت دار بناتا ہے ذرائع کا کہنا ہے کہ اس منفرد دورے میں سعودی عرب بھارت میں بنیادی ڈھانچے اور انویسٹمنٹ کے نینشنل فنڈ میں ابتدائی سرمایہ کاری کا اعلان کریں گا۔اسی طرح سعودی ولی عہد کی جاب سے بھارت کی زرعی فارموں میں سرمایہ کاری اور غذائی ایشیا کی درآمد کا دائرہ وسیع کیے جانے کا بھی امکان ہے۔سعودی عرب اور بھارت جی 20 ممالک کی تنظیم کے رکن ہیں جبکہ نئی دہلی ریاض کا ایم تجاری شریک بھی ہے۔ اس دورے کی صورت میں سعودی عرب اور بھارت کے مابین کئی معاہدوں اور یادداشتوں پر دستخط متوقع ہیں۔۔ادھر ملائیشین میڈیا کے مطابق سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے اپنا دورہ ملائیشیا اور انڈونیشیا منسوخ کردیا۔رپورٹ میں بتایا گیا کہ سعودی ولی عہد نے ملائیشیا سے نئے معاہدے کرنے تھے جبکہ اس دوران انہوں نے آئل ریفائنری اور پیٹرو کیمیکل کمپلیکس کا افتتاح کرنا تھا۔واضح رہے کہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے جنوبی اور مشرقی ایشیا کے دورے کے آغاز پاکستان سے کیا تھا۔

loading...