بنگلہ دیشی شہری نے نیویارک میں دھماکہ کیوں کیا،حملے سے پہلے ٹرمپ کو فیس بک پر کیا دھمکی دی تھی، سنسنی خیز انکشافات

  بدھ‬‮ 13 دسمبر‬‮ 2017  |  11:14

واشنگٹن(این این آئی)امریکہ میں حکام نے کہاہے کہ نیویارک میں بس ٹرمینل پر بم حملہ کرنے والے عقائد اللہ پر فرد جرم عائد کر دی گئی ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق 27 برس کے بنگلہ دیشی تارکِ وطن عقائد اللہ پیر کو نیویارک کے مرکزی علاقے مین ہیٹن میں ایک بس ٹرمینل پر خودکش حملے کی کوشش میں شدید زخمی ہو گئے تھے۔نیو یارک کے پولیس ڈیپارٹمنٹ کی ٹوئٹ کے مطابق عقائد اللہ پر مجرمانہ طور پر ہتھیار رکھنے، دہشگردی کےعمل کی حمایت اور دہشتگردی کا خطرہ پیدا کرنے کے الزام میں فرد جرم عائد کی گئی ہے۔اس شخص کے بارے میں

بتایا گیا ہے کہ اس نے پیر کو حملے سے قبل فیس بک پر صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف ایک تنبیہہ چھوڑی تھی۔فیس بک پوسٹ میں لکھا تھاکہ ٹرمپ تم اپنی قوم کو محفوظ رکھنے میں ناکام رہے ہو۔عقائد اللہ نے تفتیش کاروں کو بتایا کہ انھوں نے یہ یہ حملہ دولتِ اسلامیہ کے لیے کیا ہے۔امریکی میڈیا کے مطابق عقائد اللہ نے تفتیش کاروں کو بتایا کہ وہ یورپ میں کرسمس کے موقع پر ہونے والے حملوں سے متاثر تھا اور اس نے پورٹ اتھارٹی بس ٹرمینل پر اس تہوار کے بارے میں بہت سے پوسٹر دیکھنے کے بعد اس جگہ کو حملے کے لیے منتخب کیا۔ عقائد اللہ نے اپنے بم میں پائپنگ، کیلیں، نو والٹ کی بیٹری اور کرسمس کی لائٹوں کے تار استعمال کیے۔نیو یارک کے علاقے بروکلین میں عقائد اللہ کے گھر کی تلاشی لی گئی ہے اور پولیس کے مطابق انھوں نے تنہا ہی اس حملے کی منصوبہ بندی کی۔نیو یارک پولیس کے انٹیلیجنس اور انسدادِ دہشتگردی ڈیپارٹمنٹ کے ڈپٹی کمشنر جان ملر نے میڈیا کو بتایا کہ پولیس اور ایف بی آئی کو عقائد اللہ کے بارے میں پہلے سے معلوم نہیں تھا۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں