نیب کا خواجہ آصف،احسن اقبال، رمیش لال اور سینیٹرروبینہ خالد کے خلاف گھیرا تنگ ، 260ارب کرپشن سکینڈل کی تحقیقات میں اہم موڑ آگیا 

  پیر‬‮ 15 اپریل‬‮ 2019  |  23:00
اسلام آباد( آن لائن )نیب حکام نے سابق وزیر خارجہ خواجہ آصف کیخلاف اہم ثبوت حاصل کرلیے ہیں جبکہ متعلقہ بینکوں سے ہونے والی ٹرانزیکشن کا ریکارڈ بھی حاصل کرلیا جبکہ ملتان سکھر موٹر وے منصوبہ میں مبینہ 260ارب کرپشن سکینڈل کی تحقیقات میں اہم موڑ آگیا ہے، اس سکینڈل میں سابق وزیر داخلہ احسن اقبال کو طلب کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ احسن اقبال کو وزیر مملکت مواصلات مرادسعید کی طرف سے دئیے گئے ریکارڈ کی روشنی میں طلب کیا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی کے رکن قومی اسمبلی رمیش لال پر الزام ہے کہانہوں نے کرپشن اور بد عنوانی کرکے آمدن سے زائد اثاثے بنائے ہیں اور اس حوالے سے انہیں طلب کیا جاسکتا ہے ۔ سابق ایم این اے مرحوم رائے منصب کے خلاف اہم مقدمہ بند کیا جاسکتا ہے ۔ ذرائع نے بتایا کہ پی پی پی کی سینیٹر روبینہ خالد وغیرہ کے خلاف بھی کرپشن کے ثبوت مل گئے ہیں۔ روبینہ خالد نے اختیارات کا ناجائز فائدہ اٹھاکر شکرپڑیاں میں ہوٹل سرکاری زمین غیر قانونی طریقہ سے الاٹ کرانے کے بعد بنا رکھا ہے ۔ ان تمام کرپٹ افراد کے خلاف گھیراتنگ کیا جارہا ہے اور آئندہ چند دنوں میں گرفتار کیے جانے کا امکان ہے ۔

موضوعات:

loading...