کلبھوشن کے مقدمے میں بھارتی وکیل نے نواز شریف کا انٹرویو بطور ثبوت پیش ہونے پرنواز شریف کیخلاف بغاوت کا مقدمہ،بڑا قدم اُٹھالیاگیا

  جمعہ‬‮ 22 فروری‬‮ 2019  |  21:42
لاہور ( این این آئی) سابق وزیر عظم نواز شریف کے خلاف حلف کی پاسداری نہ کرنے پر بغاوت کی کارروائی کے لیے لاہور ہائیکورٹ میں متفرق درخواست دائر کر دی گئی ۔درخواست ایڈووکیٹ اظہر صدیق کی جانب سے دائر کی گئی جس میں نواز شریف کے متنازع انٹرویو کو بنیاد بنایا گیا ہے ۔درخواست گزار نے موقف اختیار کیا ہے کہ کلبھوشن کے مقدمے میں بھارتی وکیل نے نواز شریف کا انٹرویو بطور ثبوت پیش کیا ،نواز شریف کے متنازعہ انٹرویو سے عالمی عدالت میں پاکستان کا مقدمہ کمزور ہوا ،نجی اخبار کو دیا جانے والا متنازعہ انٹرویو پاکستان کے لیے پوری دنیا میں شرم کا باعث بنا۔ نواز شریف نے متنازعہ انٹرویو دیکر اپنے حلف کی پاسداری نہیں کی لہٰذا انکے خلاف بغاوت کے الزام کے تحت کارروائی کی جائے۔درخواست گزار کے مطابق سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے اپنی زیر صدارت بند کمرے کے اجلاس کی کارروائی نواز شریف کو بتائی ،انہوں نے بھی وزارت عظمی کے حلف کی پاسداری نہیں کی ۔نواز شریف اور شاہد خاقان عباسی کے خلاف غداری کی کارروائی کے لیے درخواستیں پہلے ہی ہائیکورٹ میں زیر التوا ہے،دونوں کیخلاف حلف کی پاسداری نہ کرنے اور بغاوت کے الزام میں کارروائی کی جائے اور عدالت مرکزی مقدمے کو جلد سماعت کے لیے مقرر کی جائے ۔ سابق وزیر عظم نواز شریف کے خلاف حلف کی پاسداری نہ کرنے پر بغاوت کی کارروائی کے لیے لاہور ہائیکورٹ میں متفرق درخواست دائر کر دی گئی ۔درخواست ایڈووکیٹ اظہر صدیق کی جانب سے دائر کی گئی جس میں نواز شریف کے متنازع انٹرویو کو بنیاد بنایا گیا ہے ۔درخواست گزار نے موقف اختیار کیا ہے کہ کلبھوشن کے مقدمے میں بھارتی وکیل نے نواز شریف کا انٹرویو بطور ثبوت پیش کیا

موضوعات:

loading...

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں