مشرف کس خطرناک بیماری میں مبتلا ہیں؟ بالآخر پتہ چل گیا لندن کے ہسپتال میں کس چیز کا علاج کیا جا رہا ہے؟سابق صدر کی سیاسی جماعت کے اہم عہدیدار نے سنسنی خیز انکشاف کر دیا‎

  جمعرات‬‮ 25 اکتوبر‬‮ 2018  |  12:49
دبئی (این این آئی)آل پاکستان مسلم لیگ اوورسیز کے صدر افضال صدیقی نے کہا کہ سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف ایملیوڈوسز نامی بیماری میں مبتلا ہیں۔نجی ٹی وی کے مطابق انہوں نے بتایا کہ بیماری کے باعث پرویز مشرف اعصابی کمزوری کا شکار ہیں اور ان کا لندن میں علاج جاری ہے۔انہوں نے بتایا کہ سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کو کھڑے ہونے، چلنے اور پھرنے میں دشواری کا سامنا ہے۔افضال صدیقی نے کہا کہ ایملیوڈوسز کے باعث ٹوٹا ہوا پروٹین مختلف اعضاء میں جمع ہونے لگتا ہے اور بروکن پروٹین بون میرو سے خارج ہوتی ہے جس کے پیکٹس جسم میں جمع ہونے لگتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ دل اور دماغ کی نسیں اور سریانیں تنگے سے زندگی کو بھی خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ اس بیماری سے دل، دماغ اور خون کا بہاؤ متاثر ہوسکتا ہے۔انہوں نے بتایا کہ ڈاکٹرز نے پرویز مشرف کی بروکن پروٹین کو مزید بننے سے روک دیا ہے اور ان کے جسم میں موجود بروکن پروٹین کو صاف کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔اے پی ایم ایل رہنما نے کہاکہ پرویز مشرف کے جسم میں پہلے سے جمع شدہ پروٹین کی وجہ سے وہ اعصابی کمزوری کا شکار ہیں۔انہوں نے کہاکہ جمع شدہ بروکن پروٹین کو صاف کرنے میں 5 سے 6 ماہ علاج جاری رہ سکتا ہے۔انہوں نے سابق صدر پرویز مشرف کے لیے قوم سے دعا کی اپیل کی ہے۔انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف نے مکمل صحت یابی کے بعد وطن واپس آنے کے عزم کا اظہار بھی کیا ہے۔

موضوعات:

loading...