زیادتی کاشکار12 لڑکیوں میں شامل واحد زندہ بچ جانے والی معصوم بچی کائنات بتول اب کس حال میں ہے؟اس کے ساتھ جنسی یا جسمانی تشدد ہوا تھا کہ نہیں؟ ڈاکٹروں کی ٹیم کا حیرت انگیزموقف سامنے آگیا

  جمعہ‬‮ 12 جنوری‬‮ 2018  |  22:19

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) چلڈرن ہسپتال لاہور کے ڈِین پروفیسر مسعود صاد ق نے کہا ہے کہ چھ سالہ کائنات بتول کو وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کی ہدایت کے مطابق علاج معالجہ کی بہترین سہولیات مفت فراہم کی جا رہی ہیں۔اُنہوں نے مزید کہا کہ چھ سالہ کائنات بتول کو گذشتہ روزچسٹ انفیکشن کی شکایت پر دوبارہ چلڈرن ہسپتال میں داخل کرایا گیا ہے ۔ ڈاکٹر مسعود صادق کا کہنا تھا کہ چھ سالہ کائنات کو گذشتہ سال نومبر میں تشویشناک حالت میںداخل کرایا گیا تھا جس کے دوران مریض بچی 5 دن وینٹی لیٹر پر رہی اور تقریباً ایک

ماہ تک انتہائی نگہداشت وارڈ میں زیر علاج رہنے کے بعد2 جنوری 2018 ء کو ہسپتال سے ڈسچارج ہوئی۔ ڈِین چلڈرن ہسپتال نے مزید بتایا کہ سینئر ڈاکٹرز کی میڈیکل ٹیم نے بچی کا معائنہ کیا اور اُنہیں جنسی یا جسمانی تشدد کے کوئی شواہد نہیں ملے۔ اُنہوں نے بتایا کہ کائنات بتول کا ایم آر آئی ٹیسٹ کیا گیا جس میں ANOXIC BRAIN DAMAGEکی تصدیق ہوئی ہے۔پروفیسر مسعود صادق نے مزید کہا کہ چھ سالہ مریضہ کی حالت قدرے بہتر ہے تاہم اُسے ابھی مزید علاج کی ضرورت ہے اور بچی ابھی بول نہیں سکتی۔ اُنہوں نے کہا کہ ڈاکٹروں کی ایک ٹیم چھ سالہ کائنات بتول کا علاج معالجہ اور نگہداشت کر رہی ہے ۔ اِس ٹیم میں فیزوتھراپی ، سپیچ تھراپی، نرسنگ کیئر اور پیڈزسرجری ، نیروسرجری اور نیرولوجی کے سپیشلسٹ ڈاکٹرز شامل ہیں۔واضح رہے کہ زخموں سے چور کائنات بتول ان 12 لڑکیوں میں شامل ہے، جنہیں گزشتہ چند دنوں میں اغوا کیا گیا، کائنات کی جان تو بچ گئی لیکن وہ صدمے کی وجہ سے حالت قومہ سے باہر نہ آسکی۔کائنات بتول ان 12 لڑکیوں میں شامل ہے، جنہیں اغوا کیا گیا، کائنات کی جان تو بچ گئی لیکن وہ صدمے کی وجہ سے حالت قومہ سے باہر نہ آسکی۔ کائنات بتول 10 نومبر کو اغوا ہوئی، 13 نومبر کو کچرے سے مل گئی۔ صدمہ اتنا شدید ہے کہ 6 سالہ کائنات کو چپ لگ گئی ہے۔ وہ نہ بول سکتی ہے،نا کھا پی سکتی ہے اور نہ ہی کسی کو پہچان سکتی ہے۔کائنات بتول کے والدین اتنے غریب ہیں کہ وہ اپنی بچی کا اعلاج بھی نہیں کرا سکتے۔ حادثے کے بعد کائنات کا لاہور چلڈرن ہسپتال میں بھی اعلاج کیا گیا لیکن اب اس کو دوبارہ قصور کے ڈی ایچ کیو ہسپتال میں اعلاج کے لیے لایا گیا۔ قومہ میں گئی بچی کے والدین کو ڈاکٹروں نے جواب دیدیا ہے۔ اب کائنات بتول کا اعلاج یا تو بہت اچھے ہسپتال میں ہو سکتا ہے یا اس کو مکمل صحت یابی کیلئے باہر کے ملک بھیجا جائے گا۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں