بھارتی عملے کے 18 اراکین بھی یرغمال، ایران برطانوی تیل بردار جہاز چھوڑ دے ورنہ۔۔!برطانیہ نے انتہائی اقدام کی دھمکی دیدی

  ہفتہ‬‮ 20 جولائی‬‮ 2019  |  21:32

لندن(آن لائن)برطانوی وزیر خارجہ جیرمی ہنٹ نے ایران کو خبرارکیا ہے کہ وہ زیرحراست برطانوی تیل بردار جہاز کو چھوڑ دے ورنہ ’سنگین نتائج‘ کا سامنا کرنے کے لیے تیار ہوجائے۔برطانوی جہاز اسٹینا امپیرو کے مالک کا کہنا تھا کہ جہاز سعودی عرب کے لیے روانہ ہوا تھا لیکن جہاز سے رابطہ منقطع ہوگیا ہے اور‘جہاز شمال سے ایران کی جانب گامزن ہے’۔ برطانوی وزیر خارجہ نے اسکائی نیوز کو انٹرویو میں کہا کہ دو بحری جہازوں کو قبضے میں لینے پر شدید تشویش ہے۔انہوں نے کہا کہ ’ہم واضح کردینا چاہتے ہیں کہ اگر صورتحال فوری طور پرمعمول کے


مطابق نہیں ہوئی تو سنگین نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا‘۔دوسری جانب بھارت نے ایران سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ برطانوی تیل بردار جہاز پر موجود بھارتی عملے کے 18 اراکین کو رہا کردے۔بھارتی وزارت خارجہ کے ترجمان رویش کمار نے بتایا کہ برطانو ی جہاز پر عملے کے 18 افراد بھارتی تھے اور نئی دہلی ایران کی حکومت سے بھارتی عملے کی محفوظ واپسی کے لیے مسلسل رابطے میں ہے۔ایران میں فلپائن کے سفیر فریڈ سینٹوز نے بتایا کہ وہ ایرانی حکام سے عملے کی واپسی کے لیے رابطے میں ہیں اور جلد ان کی رہائی ممکن ہو سکے گی

موضوعات:

loading...