پاکستان سے ایران جانیوالے پاکستانیوں کو پھانسی دیدی گئی، 10سالہ بچے کو بھی نہ بخشا،لاشوں کے ساتھ کیا شرمناک سلوک کیا گیا؟

  پیر‬‮ 17 جولائی‬‮ 2017  |  14:59

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)ایران نے پاکستان سے داخل ہونے والے دو افراد کو پھانسی پر چڑھا دیا، لاشیں جیل کے صحن میں دھوپ میں پھینک دیں۔نیو نیوز کی رپورٹ کے مطابق 8برس قبل پاکستان سے ایران میں داخل ہونے والے داد اور پوتے کو ایران میں پھانسی دیدی گئی ہے۔ پھانسی پانے والے دونوں افراد پاکستانی اور آپس میں رشتے دار تھے۔ ان میں سے محمد دہقانی کی 52سال جبکہ اس کے پوتے غدیر کی عمر 18برس تھی۔ یہافراد آج سے 8برس قبل گرفتار کئے گئے تھے۔ بتایا جاتا ہے کہ گرفتاری کے وقت غدیر کی عمر صرف 10برس تھی۔ ان

دونوں افراد پر منشیات کی سمگلنگ کا الزام عائد کیا گیا تھا ۔ دونوں افراد کوایران کے سنی اکثریتی صوبے بلوچستان میں پھانسی دی گئی اور پھانسی کے بعد ان کی لاشوں کو جیل کے صحن میں سخت گرمی میں دھوپ میں پھینک دیا گیاجو پورے ایک روز تک پچاس سے زیادہ درجہ حرارت میں وہاں پڑی رہیں۔

موضوعات:

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں