فلمسٹار حمائمہ ملک کو لاہور کے ہوٹل میں جنسی ہراسانی کا سامنا ہوٹل کے کمرے میں میرے ساتھ کیا ہوا؟اداکارہ نےکس پر سنگین الزام عائد کر دیا، پوری کہانی سامنے لے آئی

  جمعہ‬‮ 10 اگست‬‮ 2018  |  13:58

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ملک کی معروف اداکارہ اور فلمسٹار حمائمہ ملک کو ہوٹل میں جنسی ہراسانی کا سامنا، حمائمہ ملک نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر تہلکہ خیز انکشاف کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق ملک کی معروف اداکارہ اور فلمسٹار حمائمہ ملک کو لاہور کے ایک ہوٹل میں جنسی ہراسانی کا سامنا کرنا پڑ گیا جس پر انہوں نے پورا واقعہ سماجی رابطوں کیویب سائٹ ٹویٹر پر شیئر کرتے ہوئے انہیں جنسی طور پر ہراساں کرنے کے معاملے میں ہوٹل انتظامیہ کو بھی ملوث قراردیدیا ہے۔ حمائمہ ملک نے اپنے ٹویٹر پیغام میںانہیں جنسی طور پر ہراساں

کرنیوالے شخص کی شناخت ظاہر نہ کرتے ہوئے لکھا ہے کہ لاہور کے ایک نجی ہوٹل میں مجھے ہراساں کیا گیاہے۔ انہوں نے بتایا کہ انہیں جنسی ہراساں کرنیوالا شخص برابر والے کمرے میں قیام پذیر تھا اور اس نے انہیں رات 2بجے بزنس میٹنگ کی آڑ میں ملاقات کا پیغام بھیجا۔ حمائمہ بتاتی ہیں کہ اس شخص نے جب انہیں کمرے میں روتے سنا تو اس نے ہمدردی جتائی اور کہا کہ میں آپ کیلئے فکر مند ہوں اگر آپ چاہیں تو ہم میٹنگ کیلئے باہر بھی چل سکتے ہیں ۔ فلمسٹار حمائمہ کا کہنا تھا کہ انہیں جنسی طور پر ہراساں کرنے میں ہوٹل انتظامیہ کا اہم کردار ہے جس نے ان سے پوچھے بغیر اور کسٹمر کی رازداری شیئر کرتے ہوئے ان کا موبائل نمبر ہوٹل میں ہی ان کے برابر والے کمرے میں مقیم شخص کو دیا ۔ واضح رہے کہ فلمسٹار حمائمہ ملک ہی پہلی شوبز شخصیت نہیں جن کو جنسی ہراسانی کا سامنا کرنا پڑا ہے بلکہ اس سے قبل بھی کئی شوبز سے تعلق رکھنے والی خواتین الزامات عائد کر چکی ہیں۔خیال رہے کہ حال ہی میں گلوکارہ میشا شفیع نے گلوکار اور ادارکار علی ظفر پر جنسی ہراسانی کا الزام عائد کیا تھا، میشا شفیع کے الزامات کے جواب میں علی  ظفر نے انہیں لیگل نوٹس بھیجا تھا۔

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں