خسارہ کم کرنے کیلئے نیم جان سرکاری اداروں کی نجکاری کے عمل کو تیز کرنے کا اقدام خوش آئند ہے : پاکستان اکانومی واچ

  ہفتہ‬‮ 2 مارچ‬‮ 2019  |  13:15

لاہور(این این آئی ) پاکستان اکانومی واچ نے حکومت کی جانب سے خسارہ کم کرنے کیلئے نیم جان سرکاری اداروں کی نجکاری کے عمل کو تیز کرنے کے فیصلے کی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ناکام سرکاری اداروں کو پالنے کے بجائے فوری فروخت کرنا ملکی مفاد میں ہے، نجکاری میں مشکلات ہوں تو ان اداروں کو بند کر دیا جائے۔پاکستان اکانومی واچ کے صدر ڈاکٹر مرتضی مغل نے اپنے بیان میں کہا کہ نقصان میں جانے والے اداروں میں ملازمتیں جاری رکھنے کیلئے 20کروڑعوام کا استحصال نہیں ہونا چائیے،نقصان میں چلنے والے سرکاری اداروں کے نقصانات کھربوں روپے


تک جا پہنچے ہیں جبکہ2017-18میں صرف واپڈا اور پی آئی اے کو زندہ رکھنے کے لئے حکومت کو277 ارب روپے خرچ کرنا پڑے ہیں۔ڈاکٹر مرتضی مغل نے مزید کہا کہ ملکی وسائل کو دیمک کی طرح چاٹنے والے ان اداروں کو زندہ رکھنے سے نہ تو عوام کو کوئی فائدہ ہے اور نہ ہی ٹیکس گزار کو بلکہ سارا فائدہ ملازمین،کرپٹ انتظامیہ ،سیاستدانوں اور اشرافیہ کو ملتا ہے۔

موضوعات:

loading...